مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کے خلاف 24ستمبر کو جنیوا میں مظاہرہ ہوگا مظاہرے میں سید علی گیلانی کی جبری تدفین کا معاملہ بھی اٹھایا جائے گا۔ محمد غالب صدر تحریک کشمیر یورپ

جنیوا() مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کے خلاف  24ستمبر کو  جنیوا میں اقوام متحدہ  کے کمیشن برائے انسانی حقوق کے ہیڈ کواٹر  کے سامنے  احتجاجی مظاہرہ کیا جائے گا۔ مظاہرے کا اہتمام تحریک کشمیر یورپ نے کیا ہے ۔برمنگھم سے جاری ہونے والی  تحریک کشمیر یورپ کی پریس ریلیز کے مطابق بھارتی  وزیر اعظم نریندر مودی کے  اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی سے خطاب کے موقع پر 25 ستمبر کو  یورپ  کے مختلف شہروں میں کشمیر ی تارکین وطن احتجاج کریں گے ۔ ان مظاہروں میں سید علی گیلانی کی جبری تدفین کا معاملہ بھی اٹھایا جائے گا ۔ تحریک کشمیر یورپ کے صدر محمد غالب، جنرل سکریٹری میاں محمد طیب نے کہا کہ25 ستمبر کو بھارتی  وزیر اعظم نریندر مودی  اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی سے خطاب کریں گے  اس روز یورپ بھر میں احتجاج کیا جائے۔  دنیا  پر واضع کیا جائے گا کہ بھارت ایک دہشتگرد ملک ہے۔  نریندر مودی ہٹلر کے نقش قدم پر چل رہا ہے۔ مودی کے خلاف  ٹھوس  اقدامات اور ناپاک عزائم کو روکنے کی ضرورت ہے ۔ مودی دنیا کے امن کے لیے شدید خطرہ ہے۔ تحریک کشمیر یورپ کے رہنمائوں نے کہا کہ اقوام متحدہ کے قیام کا مقصد مظلوم و محکوم قوموں کے ساتھ انصاف کرنا  ہے  ، مودی جیسے دہشتگرد کو اقوام متحدہ کا پلیٹ فارم مہیا نہیں کرنا چاہئے۔  بھارت نے  74سال سے  اقوام متحدہ کی  قراردادوں پر عمل درآمد نہیں کیا۔ بھارت کسی عالمی معائدے کی پاسداری نہیں کرتا  اور کشمیریوں کے حق خودارادیت  کو تسلیم کرنے کے باوجود اپنے وعدوں سے انحراف کر رہا ہے۔ فوجی قوت کے بل بوتے پر کشمیر پر غاصبانہ قبضہ کر رکھا ہے  کشمیریوں کا قتل عام کر رہا ہے اقوام متحدہ کو ایسے ملک کی رکنیت کو ختم کرنا چاہئے ۔