کشمیری عوام نے پاکستان کا یوم آزادی یوم تشکر اور جشن آزادی کے طورپر منایا، حریت کانفرنس کی (کل) بھارت کا یوم آزادی یوم سیاہ کے طورپر منانے اورمکمل ہڑتال کی اپیل

سرینگر۔  بھارت کے غیر قانونی زیر تسلط جموںوکشمیر میںکشمیری عوام نے پاکستان کا73واںیوم آزادی یوم تشکر اورجشن آزادی کے طورپر پورے جوش و جذبے اورعقیدت و احترام کے ساتھ منایا۔ کشمیرمیڈیاسروس کے مطابق یہ دن منانے کی اپیل کل جماعتی حریت کانفرنس نے کی اور مختلف حریت رہنماؤں اور تنظیموں نے اس کی حمایت کی ہے۔حریت کانفرنس نے (آج) 15اگست کو بھارت کا یوم آزادی یوم سیاہ کے طورپر منانے اورمکمل ہڑتال کرنے کی بھی اپیل کی ہے تاکہ دنیا کو یہ پیغام دیا جاسکے کہ کشمیری اپنے مادر وطن پر بھارت کا غیر قانونی تسلط مسترد کرتے ہیں۔ کل جماعتی حریت کانفرنس نے سرینگر میں ایک بیان میں کہا ہے کہ پاکستان نے ہمیشہ کشمیریوںکی اپنے حق خودارادیت کے حصول کی منصفانہ جدوجہد کی حمایت کی ہے۔

حریت کانفرنس نے لوگوں سے اپیل کی ہے کہ وہ ہفتہ کو بھارت کے یوم آزادی کے موقع پر مکمل ہڑتال کریں۔بڑی تعداد میں بھارتی فوجیوں کی تعیناتی کے باوجود کشمیری عوام نے پاکستان سے اپنی محبت کے اظہار کیلئے سرینگر اور وادی کشمیر کے دیگر علاقوں میں پاکستانی جھنڈے لہرائے ۔ ادھر وارثین شہداء جموں و کشمیر اور تحریک آزادی جموں و کشمیر کی طرف سے پورے مقبوضہ علاقے میں جاری کئے گئے سینکڑوں پوسٹروںمیںکشمیری عوام سے پاکستان کے یوم آزادی کو ‘جشن آزادی’ کے طور پر منانے اور بھارت کے یوم آزادی کو یوم سیاہ کے طور پر منانے کی اپیل کی ہے۔حریت رہنمائوں اور تنظیموں بشمول شبیر احمد ڈار ، بلال احمد صدیقی ، عمر عادل ڈار ، عبد الصمد انقلابی ، محمداقبال میر اور تحریک وحدت اسلامی نے اپنے بیانات میں یوم آزادی کے موقع پرپاکستان کی حکومت اور عوام کو مبارکباد پیش کی ہے۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان نہ صرف جنوبی ایشیاء کے مسلمانوں بلکہ پوری امت مسلمہ کی امیدوں کا مرکز ہے۔دریں اثناء قابض انتظامیہ نے پورے مقبوضہ علاقے میںلوگوں کو پاکستان اور آزادی کے حق میں اور بھارت کے خلاف احتجاجی مظاہر ے کرنے سے روکنے کیلئے گھروں میں محصور رکھنے کی غرض سے فوجیوں اور پولیس اہلکاروںکی بھاری نفری تعینات کر دی ہے ۔بھارتی فورسز سرینگر کرکٹ اسٹیڈیم جہاں (آج) کی سرکاری تقریب منعقد ہو گی کے قریب تلاشی کی کارروائی جاری رکھے ہوئے ہیں۔ وادی کشمیر کے دیگر اضلاع میں بھی بھارتی فورسز کی بھاری نفری تعینات کی گئی ہے ۔