بین الاقوامی برادری کشمیر پر بھارتی قبضہ ختم کرائے، انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں رکوائے۔ جموں وکشمیر میں بھارتی فوجی قبضے کے 75 سال پورے ہونے پر عالمی کشمیر آگاہی فورم کا ردعمل

واشنگٹن()واشنگٹن میں قائم تنظیم عالمی کشمیر آگاہی فورم نے جموں وکشمیر میں بھارتی فوجی قبضے کے  75  سال پورے ہونے پر بھارتی اقدام کی مزمت کی ہے ۔ عالمی کشمیر آگاہی فورم  نے جمو ں و کشمیر پر بھارتی  فوجی تسلط کے 75برس مکمل ہونے کے موقع پر واشنگٹن سے جاری ایک بیان میں کہا ہے کہ بھارت کی طرف سے جموں وکشمیر کے مسلسل غیر قانونی فوجی تسلط سے کشمیریوں کو اپنی بقاکا خطرہ لاحق ہے۔ بھارتی فوجیوں 27اکتوبر 1947کو سرینگر میں اتر کر برصغیر پاک و ہند کی تقسیم کے منصوبے اور کشمیری عوام کی امنگوں کے برخلاف جموں و کشمیر پر غیر قانونی طورپرقبضہ کرلیا تھا۔بیان میں کہا گیا ہے کہ 1947سے جاری بھارتی فوجی تسلط کی وجہ سے کشمیریوں کو اپنی بقاکا خطرہ لاحق ہے کیونکہ اس عرصے کے دوران قابض فورسز نے ایک لاکھ سے زائد کشمیریوں کو شہید اور دس ہزار سے زائد کو دوران حراست لاپتہ کر دیا ہے جبکہ کشمیریوں کے تمام سیاسی ، اقتصادی اور شہری تمام حقوق سلب کر رکھے ہیں۔بیان میں کہاگیا ہے کہ بھارتی فورسز کی طرف سے کشمیری سیاسی رہنمائوں ، صحافیوں اور انسانی حقوق کے کارکنوں کی مسلسل غیر قانونی نظربندی کے باوجود کشمیریوں کے اپنے حق خودارادیت کے حصول کے مطالبے میں روز بروز شدت آتی جارہی ہے ۔ ورلڈ کشمیر اوئیرنس فورم نے جموں وکشمیر پر بھارت کے غیر قانونی تسلط ،  قید وبند ،5اگست2019کے بعد سے مسلسل جمہوری اور قانونی حقوق کی مستقل معطلی اور غیر قانونی جاسوسی جیسے دیگر پامالیوں کی بھی مذمت کی ۔ بیان کے مطابق کشمیریوں کو طویل عرصے بھارتی فورسز کی طرف سے انسانی حقوق کی پامالیوں اور دیگر مظالم کا سامنا ہے۔بیان میں بھارت پر زوردیا گیا ہے کہ وہ کشمیرمیں انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں، اپنا غیر قانونی تسلط، کشمیریوں کا قتل عام ، غیر قانونی گرفتاریاں اور کشمیریوں کی نگرانی کا سلسلہ فوری طورپر ختم کرے ۔ عالمی کشمیر آگاہی فورم نے مقبوضہ کشمیر میں ٹارگٹ کلنگ کے فوری خاتمے اور چند دنوں میں گرفتار ہونے والے ایک ہزار سے زائد بے گناہ شہریوں کی رہائی کا مطالبہ کیا ہے ۔ عالمی کشمیر آگاہی فورم نے بین الاقوامی برادری سے کشمیر میں بھارتی قبضے کے خاتمے ، احتساب اور انصاف کا مطالبہ کیا ہے تاکہ ایک اور نسل کشی کا راستہ روکا جاسکے ۔