مقبوضہ جموں و کشمیر میں پوسٹر چسپاں کشمیریوں سے بھارتی یوم آزادی یوم سیاہ کے طورپر منانے کی اپیل

سرینگر12 اگست ( ) غیر قانونی طور پر بھارت کے زیر قبضہ جموں و کشمیرکے مختلف علاقوں میں پوسٹر چسپاں کئے گئے ہیں جن میں لوگوں سے اپیل کی گئی ہے کہ وہ 15 اگست کو بھارت کے یوم آزادی کے موقع پر اکتوبر1947سے مسلسل اپنے مادر وطن پر بھارت کے غیر قانونی تسلط اور مودی کی فسطائی بھارتی حکومت کے 5اگست 2019کے غیر قانونی اقدامات کے خلاف مکمل ہڑتال کریںاور یوم سیاہ منائیں۔
 جموں و کشمیر پولیٹیکل ریزسٹنس موومنٹ ، جموں و کشمیر لبریشن الائنس ، یوتھ ونگ تحریک استقلال اور دیگر کی جانب سے چسپاں کئے گئے پوسٹروں میں کہا گیا ہے کہ کشمیری عوام نے بھارت کے غیر قانونی اور فوجی تسلط کو مسترد کر دیا ہے اور وہ غیر قانونی طور پر نظر بند تمام کشمیری سیاسی نظربندوں کی فور ی رہائی کا مطالبہ کرتے ہیں۔پوسٹروں میں مزید کہا گیا ہے کہ بھارت نے کشمیریوں کی خواہشات کے بر خلاف جموں و کشمیر پر غیر قانونی طورپر قبضہ کر رکھا ہے اور کشمیری اپنی جدوجہد آزادی کو اس کے منطقی انجام تک ہر قیمت پر جاری رکھیں گے ۔ پوسٹرو ں میں   ” بھارت کا یوم آزادی یوم سیاہ ہے ، ہم آزادی چاہتے ہیں اور ہم پاکستانی ہیں اور پاکستان ہمارا ہے”جیسے نعرے بھی درج ہیں ۔کنٹرول لائن کے دونوں اطراف اور دنیا بھر میں مقیم کشمیری بھارت کا یوم آزادی یوم سیاہ کے طورپر منائیں گے تاکہ بھارت کو جموں وکشمیر پر اس کے جبری تسلط کے خلاف اپنے شدیدغم و غصے سے آگاہ کیاجاسکے ۔